Lawyers protest against loadshedding, faulty powerhouse اردو May 31, 2017

ایس آر ایس پی نے ٹاون بجلی کے بارے میں پہلے دن سے عوام سے
جھوٹ بولا،بجلی لوڈشیڈنگ کے خلاف وکلاء کا
احتجاج

چترال(بشیر حسین آزاد) چترال کے وکلاء نے چترال میں بجلی کے عدم دستیابی اور گولین دومیگاواٹ سے بجلی چترال شہر کو فراہم نہ کرنے پر منگل کے روز احتجاجی جلوس نکالا۔جلوس مختلف جگہوں سے ہوتے ہوئے بازار پُل پر جلسہ کی شکل اختیار کی۔احتجاجی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے

عبدالولی ایڈوکیٹ ،صدر بار ساجد اللہ ایڈوکیٹ اورنیاز اے نیازی ایڈوکیٹ نے ایس آر ایس پی پر شدید تنقید کیا۔اور کہا کہ ایس آر ایس پی نے منصوبے پر35کروڑ روپے خرچہ کرنے کے باوجود عوام کو ڈھائی سال گذرنے کےباوجود بجلی فراہم کرنے میں ناکام رہا۔اُنہوں نے ضلعی انتظامیہ اورڈسٹرکٹ گورنمنٹ پر اس معاملے پر سیاست بازی کا الزم لگایا۔مظاہرین نے کتبے اُٹھائے تھے جس میں
ایس آر ایس پی 355کروڑروپے کا حساب دو اور واپڈا مردہ باد ،ایم این اے،ایم پی ایز،ضلع ناظم مردہ باد،صوبائی ومرکزی حکومت مردہ باد کے نعرے درج تھے۔
Share With Friends:

1 Comment

  • Zeeshan raza says:

    There should be an accountability of these NGOs. If all the money given to these NGO had been utilized properly, Chitral would have been the most developed district of Pakistan. Corruption is everywhere.

Comments are closed.